نسیم شاہ بمقابلہ افغانستان ایشیا کپ 2022 کی یاد تازہ

نسیم شاہ بمقابلہ افغانستان ایشیا کپ 2022 کی یاد تازہ

پاکستان اور افغانستان کے درمیان جاری تین ایک روزہ میچوں کی سیریز کے دوسرے میچ میں پاکستان نے نسیم شاہ کی شاندار اننگز کی بدولت افغانستان کو ایک وکٹ سے شکست دے کر سیریز اپنے نام کر لی ہے۔

نسیم شاہ بمقابلہ افغانستان ایشیا کپ 2022 کی یاد تازہ

جمعرات کو سری لنکا کے شہر ہمبنٹوٹا میں کھیلے گئے میچ میں افغانستان نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا اور پاکستان کو جیت کے لیے 301 رنز کا ہدف دیا جو پاکستان نے نسیم شاہ کی شاندار بیٹنگ کی بدولت آخری اوور کے پانچویں اوور میں حاصل کر لیا۔

اس سے قبل پاکستان نے 301 رنز کے تعاقب میں اننگز کا آغاز کیا اور اس کی پہلی وکٹ نویں اوور میں گری جب فخر زمان 30 رنز بنانے کے بعد فضل حق فاروقی کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔

ان کے بعد کپتان بابر اعظم نے 66 گیندوں پر 53 رنز بنائے لیکن وہ بھی فضل حق فاروقی کے ہاتھوں کیچ ہو گئے۔ محمد رضوان صرف دو رنز بنانے کے بعد رن آؤٹ ہو گئے۔

آغا سلمان بھی صرف 14 رنز بنا سکے اور محمد نبی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔ اسامہ میر بغیر کوئی رن بنائے پویلین لوٹنے سے پہلے وکٹ پر قدم بھی نہیں رکھے تھے۔

امام الحق نے سب سے زیادہ 91 رنز بنائے جس کے بعد وہ مجیب الرحمان کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔ ساتویں وکٹ افتخار احمد کی گری جو 17 رنز بنا کر عبدالرحمن کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

شاہین شاہ آفریدی چار رنز بنانے کے بعد فضل حق کا شکار ہوئے اور پھر شاداب خان میچ کے سنسنی خیز مرحلے میں 48 رنز بنانے کے بعد رن آؤٹ ہوئے۔ نسیم شاہ نے میچ کے آخری اوورز میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پاکستان کو فتح دلائی۔

پاکستان کو دو گیندوں پر تین رنز درکار تھے اور نسیم شاہ اسٹرائیک پر تھے۔ اوور کی پانچویں گیند پر نسیم شاہ نے ایک بار پھر تیز شاٹ کھیلنے کی کوشش کی اور گیند ان کے بلے کا کنارہ لے کر وکٹوں کے پیچھے باؤنڈری کراس کر گئی اور پاکستان نے میچ جیت لیا۔

یہ بھی پڑھیں : ایشیا کپ 2023 کے لیے بھارتی ٹیم کا اعلان

افغان ٹیم نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 300 رنز بنائے۔ افغانستان کی جانب سے رحمان اللہ گرباز نے 151 گیندوں پر 14 چوکوں اور 3 چھکوں کی مدد سے 151 رنز کی اننگز کھیلی۔

ان کے علاوہ ابراہیم زدران نے 80 اور محمد نبی نے 29 رنز بنائے۔پاکستان کی جانب سے شاہین شاہ آفریدی نے دو جبکہ اسامہ میر اور نسیم شاہ نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

اگر افغانستان کی اننگز کی بات کی جائے تو افغان اوپنرز رحمان اللہ گرباز اور ابراہیم زدران نے مل کر پہلی وکٹ کے لیے 227 رنز کی شاندار شراکت قائم کی۔ پاکستان کو پہلی کامیابی 39.5 اوورز میں 227 رنز پر ابراہیم زدران کی وکٹ کی صورت میں ملی جب وہ اسامہ میر کی گیند پر افتخار احمد کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

ان کے بعد رحمان اللہ گرباز 256 کے سکور پر شاہین شاہ آفریدی کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے کھڑے محمد رضوان کو کیچ دے کر پویلین لوٹ گئے۔

افغانستان کی تیسری وکٹ راشد خان کے حصے میں گری جب وہ دو کے انفرادی سکور پر شاہین شاہ آفریدی کے ہاتھوں ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوئے۔

افغانستان کی چوتھی وکٹ اس وقت گری جب شاہد اللہ ایک رن بنا کر شاہین آفریدی کے تھرو کی وجہ سے رن آؤٹ ہوئے۔

افغان ٹیم کی پانچویں وکٹ 294 رنز پر گری جب محمد نبی 29 رنز بنا کر نسیم شاہ کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں