کنگ چارلس نے ایک بار مذاق میں کہا کہ شاید وہ میرا حقیقی باپ نہیں ہے: پرنس ہیری 11

کنگ چارلس تھری نے ایک بار مذاق میں کہا کہ شاید وہ میرا حقیقی باپ نہیں ہے: پرنس ہیری

کنگ چارلس نے ایک بار مذاق میں کہا کہ شاید وہ میرا حقیقی باپ نہیں ہے: پرنس ہیری

کنگ چارلس تھری نے ایک بار مذاق میں کہا کہ شاید وہ میرا حقیقی باپ نہیں ہے: پرنس ہیری

لندن: برطانوی شہزادہ ہیری نے اپنی سوانح عمری ‘اسپیئر‘ میں لکھا ہے کہ ان کے والد کنگ چارلس تھری نے ایک موقع پر ان سے مذاق میں کہا کہ شاید وہ میرے حقیقی والد نہیں ہیں۔

شہزادہ ہیری کی سوانح عمری کا ایک اور اقتباس سامنے آیا ہے جس کے مطابق ہیری نے ‘اسپیئر’ میں اپنے والد چارلس کی حس مزاح پر تنقید کی تھی۔

مزید معلومات کے لیے لمحہ اردو وزٹ کرتے رہیں۔۔۔

شہزادہ ہیری نے لکھا کہ ان کے والد چارلس جو اب بادشاہ ہیں ایک موقع پر انہوں نے مجھے بتایا کہ انہیں لگتا ہے کہ شاید وہ میرے حقیقی والد نہیں ہیں، جس کے بعد کافی دیر تک مذاق، افواہیں گردش کرتی رہیں۔

ہیری نے کتاب میں یہ بھی لکھا ہے کہ اس نے اور ولیم نے اپنے والد کنگ چارلس تھری سے درخواست کی کہ وہ کیملا سے شادی نہ کریں کیونکہ انہیں خدشہ تھا کہ وہ بری سوتیلی ماں بن جائے گی۔ زندگی کے بارے میں ہیری کے غیر معمولی دعوؤں سے بھرپور یہ کتاب 10 جنوری کو ریلیز ہو رہی ہے۔

برطانوی شہزادہ ہیری نے اپنی نئی کتاب میں انکشاف کیا ہے کہ 2019 میں ان کے بڑے بھائی شہزادہ ولیم نے انہیں کالر سے پکڑ کر فرش پر گرا دیا۔ برطانوی اخبار کے مطابق ہیری نے اسپیئر میں لکھا کہ لندن کے گھر کے کچن میں ان کے بڑے بھائی ولیم کے ساتھ جھگڑا ہوا، جس کے بعد ولیم نے اپنی اہلیہ میگھن مارکل کو بدتمیزی کا نشانہ بنایا، جس پر دونوں میں جھگڑا ہو گیا، اور پھر ان کے درمیان جھگڑا ہوا۔

ولیم نے مجھے فرش پر گرایا۔ ہیری نے اپنی کتاب میں ملکہ پر تنقید کرتے ہوئے لکھا ہے کہ مجھ پر شاہی خاندان کے دروازے ان کی وجہ سے بند ہوئے۔ ہیری نے کتاب میں مزید الزام لگایا ہے کہ ولیم نے اسے کالر سے پکڑا اور جو ہیروں کا ہار میں نے پہن رکھا تھا اسے توڑ دیا، جس کے بعد اس نے مجھے فرش پر گرا دیا۔

بکنگھم پیلس کی جانب سے ابھی تک ان الزامات کا کوئی جواب نہیں دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں