12

عائزہ خان کون ہیں جانیے

عائزہ خان پاکستان کی مشہور و مایاناز اداکارہ ہیں جو کے کئی سالوں سے پاکستانی ڈراما انڈسٹری کا حصہ ہیں اور کئی مشہور ڈرامہ سیریلز کا بھی حصہ رہ چکی ہیں۔
کنزہ خان اپنے اسٹیج نام عائزہ خان سے جانے والی اداکارہ 15 جنوری 1991 کو پیدا ہوئیں۔ عائزہ خان نے کئی ٹیلی ویژن سیریلز میں اہم کردار ادا کیے ہیں جن میں زرد موسم (2012)، ادھوری عورت (2013)، میرے مہرباں (2014)، دو قدم دور تھے (2014)، پیارے افضل (2014)، تم کون پیا (2016)، محبت تم سے نفرت ہے (2017)، کوئی چاند رکھ (2018)، یاریاں (2019) اور چپکے چپکے (2021)۔ میرے پاس تم ہو میں مہوش کے کردار کے لیے انہیں بہت پذیرائی ملی۔ عائزہ کو لکس اسٹائل ایوارڈز، ہم ایوارڈز اور پاکستان انٹرنیشنل اسکرین ایوارڈز سمیت متعدد اعزازات سے نوازا جا چکا ہے۔

عائزہ خان نے سکول میں پڑھتے ہوئے “پینٹین شائن پرنسس” کے مقابلے میں حصہ لیا اور پہلی رنر اپ کے طور پر سامنے آئیں۔ اس کے فوراً بعد انہیں ٹیلی کام کے اشتہارث میں بطور ماڈل کام کرنے کی پیشکش ہوئی اور پھر انہوں نے ماڈلنگ پر توجہ دینا شروع کر دی۔ اپنے کالج کے آغاز کے دوران، انہوں نے ماڈلنگ کی مزید پیشکشیں لینا شروع کر دیں اور آخرکار اپنی پڑھائی کو آگے بڑھانے کے بجائے شوبز کی طرف چلی گئیں، جس کا انکشاف انہوں نے اے آر وائی ڈیجیٹل میں ندا یاسر کے ساتھ اپنے انٹرویو میں کیا۔ انہوں نے 18 سال کی عمر میں ایک اداکارہ کے طور پر اپنے کیریئر کا آغاز کیا، جس نے ہم ٹی وی پر نشر ہونے والی رومانوی فلم تم جو ملی میں معاون کردار سے اپنا آغاز کیا۔ کئی ٹیلی ویژن سیریز میں معاون کردار ادا کرنے کے بعد، وہ جیو ٹی وی کے رومانوی ڈرامے ٹوٹے ہوا پر (2011) میں مین اداکارہ کے طور پر نظر آئیں۔ اس کے بعد انہوں نے ڈرامہ عکس (2012)، رومانوی ڈرامہ کہی انکہی (2012)، اور ادھوری عورت (2013)، فیملی ڈرامہ میری مہربان (2014)، اور المناک رومانس میں کئی کرداروں کے ساتھ خود کو پاکستان میں ایک معروف اداکارہ کے طور پر قائم کیا۔ 2014 کے سماجی ڈرامے پیارے افضل میں ان کی اداکاری کی وجہ سے انہیں بہت پذیرائی حاصل ہوئی اور بہترین ٹیلی ویژن اداکارہ کا لکس اسٹائل ایوارڈ حاصل ملا۔ 2019-20 کے رومانوی ڈرامے میرے پاس تم ہو میں ان کی کارکردگی نے انہیں بہترین ٹیلی ویژن اداکارہ کا پاکستان انٹرنیشنل اسکرین ایوارڈ حاصل ہوا۔

ڈراما سیریل میرے پاس تم پاکستان کے علاؤہ بھارت میں بھی بہت مشہور ہوا اور یوٹیوب اور مختلف ڈیجیٹل پلیٹ فارموں پر ڈراما کو بہت پذیرائی ملی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں